52

)ڈسٹرکٹ کوالٹی کنٹرول بورڈ نے ڈرگ ایکٹ کی مختلف خلاف ورزیوں کی پاداش میں 17میڈیکل سٹورز کے مالکان اور عطائی ڈاکٹرز کے خلاف کیسز ٹرائل کے لئے ڈرگ کورٹ بھجوانے،سنگین خلاف ورزی کے مرتکب ایک میڈیکل سٹور کے خلاف مقدمہ درج کرانے کا فیصلہ کیا ہے

فیصل آباد(فراز نیوز،مانیٹرنگ ڈیسک جبکہ چار کووارننگ اور دستاویزات کی تصدیق کے سلسلے میں 12میڈیکل سٹور/کلینک کے کیسز موخر کردئیے۔ڈپٹی کمشنر سیداحمد فواد کی زیر صدارت منعقد ہونے والے ڈسٹرکٹ کوالٹی کنٹرول بورڈ کے اجلاس میں مجموعی طور پر 34میڈیکل سٹورز/کلینکس کی خلاف ورزیوں کاجائزہ لیا گیا جن کے خلاف ڈرگ انسپکٹرز کی طرف سے انسپکشن رپورٹس بھجوائی گئی تھیں۔اجلاس میں سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر مشتاق سپرا،بورڈ کے ممبرز کیپٹن ڈاکٹر محمد صدیق،غلام سرور،سیکرٹری بورڈ عارف شہزاد،ڈپٹی پراسیکیوٹر سجیلہ نذیر،ڈرگ انسپکٹرز محسن اصغر،خالد مصطفیٰ،محمد ذیشان اوردیگر افسران بھی موجود تھے۔ڈپٹی کمشنرنے ڈرگ ایکٹ کی خلاف ورزیوں کے مرتکب میڈیکل سٹور/کلینکس کے خلاف انسپکشن رپورٹس کاجائزہ لیتے ہوئے کہا کہ بغیر ڈرگ لائسنس،غیر رجسٹرڈ اور غیر معیاری ادویات فروخت کرنے والے میڈیکل سٹورز کو فی الفور سیل کیا جائے اور بعدازاں ان کی نگرانی کرتے ہوئے ازخود سیل توڑنے والوں کے خلاف مقدمات درج کرائیں۔انہوں نے ڈرگ انسپکٹرز سے کہا کہ وہ جعلی وغیر معیاری ادویات فروخت کرنے والوں کے خلاف ٹھوس کیسزتیار کرکے ڈرگ کورٹ میں موثر پیروی کریں تاکہ انسانی جانوں سے کھیلنے والوں کو کیفرکردار تک پہنچاکراس قبیح فعل کا قلع قمع کیا جاسکے۔ڈپٹی کمشنر نے ہدایت کی کہ مکمل نگرانی کرتے ہوئے نشہ آورادویات کی فروخت میں ملوث میڈیکل سٹورز کے خلاف کارروائی میں تاخیر نہ کریں۔انہوں نے ڈرگ انسپکٹرز کو دیانتداری سے کام کرتے ہوئے کارکردگی مزید بہتر بنانے کی تاکید کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں